10

مائعات نہیں جلتے بلکہ بخارات جلتے ہیں

مائعات نہیں جلتے بلکہ بخارات جلتے ہیں 🔥
تحریر سلمان رضا اصغر
لوگ اکثر ایک دوسرے سے جلنے یا ایک دوسرے کو جلانے کے کاموں میں مشغول رہ کر اپنی زندگی کا کافی وقت برباد کر لیتے ہیں, خاص کر خواتین کی زندگیوں میں کھانا پکانے کے بجائے جلا دینے کے باعث صورتحال بے حد سنگین ہو جاتی ہے. بہرحال اکثر لوگ اس پر یقین رکھتے ہیں کہ جلنے والے یا آتش گیر مائعات جیسے پیٹرول و ڈیزل وغیرہ تھوڑی سی حرارت پانے پر تیزی سے جلنے لگتے ہیں جبکہ درحقیقت ان آتش گیر مائعات سے ہوا میں اٹھتے ان کے بخارات فضا میں مناسب مقدار میں حرارت پانے پر آکسیجن سے کیمیائی تعامل کر کے شعلے میں تبدیل ہوجاتے ہیں اور کسی بھی آتش گیر مائعات کے بخارات سے بننے والے شعلے بجھانا کوئی آسان کام نہیں ہے.

مائع کے مالیکیولز یوں تو ہر لمحہ بخارات بن کر ہوا میں تحلیل ہو جانے کے لئے زور لگاتے رہتے ہیں. کسی بھی مائع کے مالیکیولز کا گیس کی حالت میں تبدیل ہونے کا دباؤ Vapor pressure کہا جاتا ہے. ایک مائع کا ابلنا boil ہونا دراصل اس مائع کے vapor pressure کا اس پر پڑنے والے اس پر پڑنے والے فضائی دباؤ کے برابر ہو جانا ہے. مائع کا vapor pessure دراصل مائع کے مالیکیولز کی حرکی توانائی پر منحصر ہوتا ہے اور مالیکیولز کی حرکی توانائی کا تعلق مائع کے مالیکیولز کے درجہ حرارت اور اس کی کمیت اور اس کے مالیکیولز کی ولاسٹی سے ہے. جب درجہ حرارت نقطہ کھولاؤ boiling point پر آتا ہے تو مائع کے مالیکیولز کی اوسط حرکی توانائی بڑھ جاتی ہے اور مالیکیولز کے درمیان کشش یا آپس میں جڑے رہنے کی قوتیںintermolecular forces کمزور پڑ جاتیں ہیں اور مائع کے گیس کی حالت میں تبدیل یا بخارات بننے کا عمل شروع ہوجاتا ہے. ایسے آتش گیر مائعات جن کے ملیکیولز کے بخارات میں تبدیل ہونے کی شرح evaporation rate کم ہو وہ دیر سےآگ پکڑتے یا جلتے ہیں. جیسے ڈیزل پیٹرول کی نسبت دیر سے جلتا ہےکیونکہ ڈیزل کے مالیکولز کے بخارات میں تبدیل ہونے کی شرح کم ہے اور یہ حرارت کو پیٹرول سے زیادہ جذب کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے اور پیٹرول کی نسبت دیر سے بخارات میں تبدیل ہوتا ہے.

آتش گیر مائعات کے لئے وہ کم سے کم درجہ حرارت پر جس پر مائع سے اس قدر مقدار میں بخارات بنتے ہیں جو آگ پکڑنے کے لئے کافی ہوتے ہیں اسے فلیش پوائنٹ کا نام دیا گیا ہے اور تمام ہی آتش گیر مائعات کے فلیش پوائنٹ مختلف ہوتے ہیں.آتش گیر مائع کا فلیش پوائنٹ اس پر موجود دباؤ کے بڑھنے پر کم اور دباؤ کے کم ہونے پر زیادہ ہو جاتا ہے. جب آتش گیر مائع میں آگ بھڑکتی ہے تو اس کادرجہ حرارت بڑھ جاتا ہے یہی بڑھا ہوا درجہ حرارت باقی مائع کو بخارات بنا کر جلاتا جاتا ہے اسے آتش گیر مائع کا فائر پوائنٹ Fire point کہا جاتا ہے جو کہ تھوڑا بڑھا ہوا درجہ حرارت ہے اور اسی کے سبب آتش گیر مائعات کو جلانے کے لئے استعمال کئے جانے والی چیز یا ذریعے کو مائعات سے دور کر لینے کے باوجود یہ مسلسل جلتے رہتے ہیں.

👣 سلمان رضا

اس مضمون پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں