8

سمندری لہریں

🌊 🌊 سمندری لہریں 🌊 🌊

تحریر سلمان رضا اصغر صاحب

🌊 سمندر کی لہروں سے ساحل پر موجود ہرایک لطف اندوز ہوتا یہ لہریں قدرت کی ایک ایسی خوبصورتی ہے جو ساحل پر آکر خود توبکھر جاتی ہے لیکن ہم میں اک جوش و خروش سا بھر دیتی ہیں. کافی دیر تک ان کا نظارہ کرنے سے ذہن تھکاوٹ کا شکار نہیں ہوتا. سمندر میں ہر لمحے بہت سی مختلف قسم کی لہریں اٹھتی بنتی رہتی ہیں اور موسمی حالات میں بدلاؤ سے نئے نئے روپ میں اپنا جوبن دکھلاتی ہیں. ان لہروں میں ایک ردھم سی ہوتی ہے پرسکون لہروں اور بڑی تند و تیز لہروں میں باقاعدہ وقفے ساحلِ سمندر پر خود کو بھگونے والوں یا سمندر میں سرفنگ کرنے والوں کے دلوں میں خوشی کی لہریں پیدا کرتے ہیں اور کبھی کبھار بیچ سمندر میں جہازوں پر موجود لوگوں کے لئے یہ بے حد بپھری ہوئی اونچی لہریں ایک بھیانک روپ دھار لیتی ہیں.

🌊 سمندروں میں لہروں کے پیدا ہونے کی سب سے عام وجہ ہوا کا تیزی سے چلنا ہے. تیز ہوا جب سطح سمندر سے رگڑکھاتی ہے تو اس میں چھوٹی بڑی لہریں بناتی ہیں. چلنے والی تیز ہوا کی کئی تہیں یا پرتیں layers ہوتی ہیں. سمندروں میں ہوا کی سب سے نیچے والی تہہ یا پرت layer پر پانی کی سطح پر موجود زمین کی کشش ثقل اپنا زور لگاتی ہے تو پانی ہوا کی مختلف پرتوں پر اچھلتا ہوا سب سے اوپر والی پرت تک پہنچ جاتا ہے اور یوں سمندر ہوا کے دوش پر سوار ہوجاتا ہے. کششِ ثقل کا زور ہوا کی مختلف پرتو ں layers پر مختلف ہوتا ہے اور اسی سبب ہوا کی پرتوں کے چلنے کی رفتار مختلف ہوتی ہے. سب سے اوپر والی ہوا کی پرت کے نیچے کی جانب گرنے سے لہر کی دائروی حرکت بن جاتی ہے اور یہ دائروی حرکت ہی لہر کے آگے کی جانب نیچے کی سمت سے پانی کی سطح پر دباؤ پیدا کرتی ہے اور سطح کے پیچھے کی سمت سے پانی کی سطح کواوپر اٹھانے والا دباؤ بناتا ہے جس کی وجہ سے لہر بلند ہوتی جاتی ہے.

🌊 ساحلِ سمندر کے کم گہرے پانی میں بھی مدوجزر کی لہریں tidal waves پیدا ہوتی ہیں جن کی وجہ چاند و سورج کی کششِ ثقل ہیں جو اپنا زور اپنے محور پہ گھومتی زمین پر لگاتیں ہیں .زمین کے دونوں طرف موجود سمندر کی سطح ایک خاص پیٹرن کے ساتھ مدوجزر tides پیدا کرتی ہیں. چاند چونکہ زمین سے زیادہ نزدیک ہے تو اس کی کششِ ثقل زمین پر زیادہ اثر ڈالتی ہے. سمندری سرگرمیوں میں مصروف جہازوں کو اپنے کام محفوظ طور پر انجام دینے کے لئے ان مدوجزری لہروں کے ساتھ سمندری کرنٹ جو کہ سمندر کے پانی کی رفتار و سمتار یا ولاسٹی ہے جو کہ پانی کی سطح کے اوپر نیچے یا مدوجزر tides , تیز ہوا اور سمندری پانی کی مختلف کثافتوں کے سبب پیدا ہوتا ہے کی ہر پل مکمل معلومات رکھنا لازمی ہوتا ہے.

👣 سلمان رضا

اس مضمون پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں