11

ایسٹرائیڈز 🌑 Asteroids ✨✨✨ تحریر سلمان رضا اصغر

✨✨✨ ایسٹرائیڈز 🌑 Asteroids ✨✨✨
تحریر سلمان رضا اصغر
🌑 خلا میں دھاتی, پتھریلی چٹانوں یا دونوں چیزوں کے مرکب اجسام ہیں اور یہ بغیر ہوا اور بہت کم گریویٹی رکھنے والے بہت بڑے بڑے ٹکڑوں میں موجود ہیں, یہ سورج کے گرد مدار میں چکر کھا رہے ہیں. یہ بڑے بڑے پتھر یا دھاتی اجسام حجم یا سائز میں سیاروں کے مقابلے چھوٹے ہیں. ان کو پلینٹوآئڈز planetoids یا پھر چھوٹے سیارے بھی کہا جاتاہے. ایک عام asteroid کاا وسطاً درجہ حرارت منفی 100 فارن ہائیٹ یا منفی 73 سینٹی گریڈ ہوتاہے .

🌑 نظام شمسی میں انکی تعداد لاکھوں میں ہے. یہ سائز میں کئی سو میل سے چند فیٹ feet کے بھی ہوتے ہیں. بہرحال ان سب موجود ایسٹیرائڈز کا ما س یا کمیت کو کل ملا کر بھی زمینی چاند کے ماس سے کم ہی ہے.ایسٹرائڈز کو ٹیلی اسکوپ کی مدد سے دیکھا جا سکتاہے. یہ Asteroids دراصل ہمارےنظام شمسی (جو تقریباً 4.6 بلین سال پہلے وجود میں آیا) کے وجود میں آنے کے بعد کا بچا کچا حصہ یا ملبہ ہے اور یہ سب بے ڈول اور بےہنگم شکل کے ہیں.

🌑 ایسٹرائیڈز پٹی Asteroid Belt:
ایسٹیرائڈز سورج کے گرد بیضوی مدار میں گردش کرتے ہیں اور ساتھ ہی انکی اپنی محوری گردش بھی ہوتی ہے جو اکثر لڑھکتی اور مدار سے بھٹک کر ادھر ادھر آوارہ پھرنے جیسی ہو جاتی.جیسا کہ یہ Asteroids سورج کے قریب ہی تشکیل پاتے ہیں اس لئے ایک بہت بڑی تعداد میں asteroids ایک دائرےکےصورت مارس Mars اور جیو پیٹر Jupiter کے مداروں orbits کے درمیان موجود ہیں. اورسورج کےگر د چکر لگاتے ہیں اسکو ایسٹرازئڈز کی بیلٹ asteroid belt یا پٹی کہتے ہیں. اس میں کئی ملین چھوٹے بڑے ایسٹرازئڈز ہیں. سائنسدان کہتے ہیں کہ یہ بیلٹ ایسےمادےسے بنی ہے جو سیارہ بننے کی خاصیت نہیں رکھتا یا یہ کسی سیارے کی ختم ہونے کی باقیات ہیں جو بہت پہلے ٹکڑے ٹکڑے ہو گیا تھا. اس بیلٹ میں 1.1 سے 1.9 ملین ایسٹرائڈز ہیں ان میں سے ٹروجن Trojans قسم کے ایسٹرائڈز جوپیٹر کے آربٹ یا مدار کو استعمال کرتا ہے مگر جوپیٹر سے 60 ڈگری آگے یا پیچھے ہی رہتے ہیں. اس بیلٹ میں Ceres سب سے بڑا asteroid ہے. اسکا سائز 580 miles ہے. یہ دوسرے asteroid سے مختلف اور بیضوی شکلspherical کا ہے. یہ سب سے پہلےدر یافت ہوا تھا. ایسٹیرائڈز میں سے 150 ایسے ہیں جو اپنا چاند بھی رکھتے ہیں.

🌑 میٹیؤرائڈز, میٹیؤرز, میٹیؤرایٹس
ہMeteoroid ,Meteors ,Meteorites :
سائنسدان یقین رکھتے ہیں کہ ماضی میں ا پنےمد ار کو چھوڑ کر asteroids کے ٹکڑے زمین اوردوسرےسیار وں سے متصادم ہوتے رہےہیں. اورا س وجہ سے انکی ساخت پر اثر انداز ہوتے رہے ہیں. ماہر فلکیات ان asteroids پر ہرد م نظر رکھتے ہیں جو زمین کےمدار کو کاٹتے ہوئے اپنے راستے پر چلتے ہیں. مگرا س بات کے چانس کم ہیں کہ یہ زمین سے متصادم ہونگے مگر خطرہ تو بنا رہتاہے.چھوٹے ایسٹیرائڈز جن کے بارے میں ماہر فلکیات خیال کرتے ہیں کہ زمین سے آکر ٹکرائے تو یہ ایک بڑا شہر تباہ کر سکتے ہیں یا سونامی کی تباہی لا سکتے ہیں.

🌑 میٹیؤرائڈز, میٹیؤرز یا میٹیؤرایٹس سب دراصل ایک ہی چیز کے مختلف نام ہیں مگر اس چیز کو اس کی مختلف جگہوں پر موجودگی یا پہنچ جانے کی بنا پر اس کو مختلف نام دئیے گئے ہیں .ایسٹرائیڈز کے ہی چھوٹے ٹکڑوں کو میٹیؤرائڈز کہا جاتا ہے , ان کے زمین کی فضا میں جلنے پر میٹیؤرز اور زمین کی سطح پر گر جانے یا ٹکرانے پر میٹیؤرایٹس کہا جاتا ہے. میٹیؤرز Meteorsخلا سے زمین پر آنے والے چھوٹے اجسام کو کہاجاتا ہے جب یہ کرہ ہوائی میں داخل ہوتا ہے تو فضا کی رگڑ سے آگ بگولہ ہو جاتا ہے. لیکن اگر یہ آنے والا جسم کے کچھ حصے بغیر جلے زمین پر گرتے ہیں تو ان کو میٹیؤرایٹس Meteorites کہا جاتا ہے.

👣 سلمان رضا
https://www.facebook.com/ilmkijustju/

https://www.facebook.com/groups/AutoPrince/

http://justju.pk

اس مضمون پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں